وسوسه = لفظ تقلید قلاده سے هے جوصرف جانور کے گلے میں باندها جاتا هے

وسوسه = لفظ تقلید قلاده سے هے جوصرف جانور کے گلے میں باندها
جاتا هے ، لهذا جو لوگ ائمہ اربعہ کی تقلید کرتے هیں وه بهی جانوروں کی طرح ائمہ کا
قلاده اپنے گلے میں ڈال دیتے هیں
جواب = لفظ قلاده لغت عرب کی روسے صرف جانور کے ساتھ خاص نہیں
هے ، بلکہ اگرجانورکے لیئے لفظ قلاده استعمال هوتو رسی اورپٹہ کے معنی میں آتا هے ،
اور لفظ قلاده جب انسان کے لیئے استعمال هوتو اس کا معنی هار هوتا هے ، اورایک عامی
یاعالم اجتهاد سے عاجز شخص فروعی واجتهادی مسائل میں ایک امام مجتهد کی راهنمائی وعقیدت
کا هار پہنتا هے ، تواس کے اس عمل کو تقلید کہا جاتا هے ، اورتقلید وقلاده کا لفظ چونکہ
صرف حیوان کے ساتھ خاص نہیں هے ، بلکہ انسان کے لیئے بهی استعمال هوتا هے ، اس لیے
اس میں کوئی عیب وتوهین نہیں هے ، حتی کہ ایک مشہور صحابیہ هیں حضرت أمية بنت قيس الغفارية
رضی الله عنها یہ (صاحبة القلادة) کے لقب سے مشہور تهیں ، هجرت کے بعد مسلمان هوئی
، اور آپ صلی الله علیہ وسلم سے شرف بیعت ان کوحاصل هوا ، اورغزوه خیبرمیں دیگرصحابیات
کے ساتھ شریک هوئی ، اسی واقعہ میں حضرت أمية بنت قيس الغفارية رضی الله عنها کو آپ
صلی الله علیہ وسلم ایک هار دیا تها ، جوان کے گلے میں مرتے دم تک لٹکا رها ، یہاں
تک کہ وه فوت هوگئ اور یہ وصیت کی یہ هار ان کے ساتھ دفن کیا جائے الخ
اور اس حدیث میں هار کے لیئے قلاده کا لفظ استعمال هوا هے ،
جس سے یہ معلوم هوا کہ قلاده کا لفظ صرف حیوان کے ساتھ خاص نہیں هے ، جیساکہ
لفظ اتباع قرآن وسنت اور الله ورسول کی پیروی کے ساتھ خاص نہیں
هے ، بلکہ لفظ اتباع نفس وشیطان وخواهشات وکفار وگمراه لوگوں کی پیروی کرنے کےلیئے
بهی استعمال هوا هے ، روایت کے الفاظ درج ذیل هیں جس میں قلاده کا لفظ هار کے معنی
میں استعمال هوا هے
وأخذ هذه القلادة التي ترين في عنقي فأعطانيها وعلقها بيده في
عنقي فوالله لا تفارقني أبدا قالت فكانت في عنقها حتى ماتَت ثم أوصت أن تدفن معها
. الخ انظر سنن أبي داود ، مسند أحمد ، الروض الأنف ، البداية والنهاية
، وطبقات لابن سعد ، وسيرة
ابن هشام
اور اسی طرح کئ احادیث میں لفظ تقلید اور اس کے مشتقات انسان
کے حق میں استعمال هوئے هیں ، مثال کے طور پر بخاری شریف کی روایت میں هے
فتلقاهم النبي صلى الله عليه وسلم على فرس لأبى طلحة عرى وهومتقلد
سيفه فقال لم تراعوا لم تراعوا ( ج 1 ص 427 ) . اسى طرح ترمذى ونسائي وابن ماجه كى
ايک روايت میں هے وإذا بلال متقلد السيف بين يدي رسول الله صلى الله عليه وسلم
.
اس حدیث میں حضرت بلال رضی الله عنہ کے لیئے اورگذشتہ حدیث میں
آپ صلى الله عليه وسلم کے لیئے یہ لفظ استعمال هوا هے ، کیا کوئی ذی عقل اور هوش مند
اس میں گستاخی کا پہلونکال سکتا هے ؟؟ حاصل کلام یہ هے کہ یہ وسوسہ بالکل باطل هے کہ
تقلید اور قلاده اور اس کے هم مثل الفاظ جانوروں کے لیئے هی استعمال هوتے هیں ، اورتمام
ائمہ لغت بهی اس لفظ کو جانوروں کے ساتھ مخصوص نہیں سمجهتے ، مثلا علماء لغت کی بعض
تصریحات ملاحظہ کریں
وقلدتها قلادة بالكسروقلادا بحذف الهاء جعلتها فى عنقها فتقلدت
ومنه التقليد فى الدين ( تاج العروس شرح قاموس ) . القِلآَدَةُ التي في العنق و قَلَّدَهُ
فَتَقَلَّدَ ومنه التَّقْلِيدُ في الدين وتقليد الولاة الأعمال وتقليد البدنة أن يعلق
في عنقها شيء ليعلم أنها هدي و تَقَلَّدَ السيف (مختار الصحاح) . القلادَةُ: التي في
العنق وقَلَّدْتُ المرأة فَتَقَلَّدَتْ هي ومنه التَقليد في الدينِ وتَقليدُ الوُلاةِ
الأعمالَ وتَقْليدُ البَدَنةِ أن يُعلَّقَ في عنقها شيءٌ ليُعلمَ أنَّها هَدْيٌ ويقال
تَقَلَّدْتُ السيفَ .( الصحاح في اللغة
) .

مذکوره بالا تفصیل
سے یہ وسوسہ باطل هوگیا کہ لفظ تقلید وقلاده تو صرف جانوروں کے استعمال هوتا هے ، باقی
تقلید سے متعلق دیگر تفاصیل کے لیئے اس باب میں مفصل کتب کی رجوع کریں ، جن میں سب
سے بہترین کتاب میری نظرمیں اردو زبان میں امام اهل سنت حضرت شیخ الحدیث سرفرازخان
صفدر رحمہ الله کی کتاب (( الکلام المفید فی اثبات التقلید)) هے ، اوراسی طرح وکیل
احناف استاذالمحدثین مناظراهل سنت حضرت العلامہ امین صفدر اوکاڑوی رحمہ الله کی کتاب
(( تحقیق مسئلہ تقلید)) وغیره کتب بهی اس باب میں بہت مفید ہیں . ومن شاء التفصیل وا
ووف علی المزید حول مسألة التقليد وغيرها
فلیراجع الی کتب الشیخ العلامة محمد أمين الأوكاروي فانه قد أجاد وأفاد واستوفى في
كل ما ذهب اليه من الرد والتعاقب على الفرقة الجديدة المسماة ب
ـ أهل الحديث وغيرالمقلدين رحمه الله
وجاز الله عنا خيرا الجزاء وجمعنا الله واياهم في مستقر رحمته والحمد لله أولا وآخرا

By Mohsin Iqbal

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s